آرمی چیف کی ایکسٹینشن کے معاملے میں کوئی ابہام نہیں:حمزہ شہباز

لاہور: پاکستان مسلم لیگ(ن) کے رہنما اور پنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف حمزہ شہباز شریف نے کہا ہے کہ آرمی چیف کی ایکسٹینشن کے معاملے میں کوئی ابہام نہیں،پارلیمنٹ میں ووٹ دینے کا فیصلہ پارٹی قیادت کا تھا ،قوموں کی زندگی میں ایسے معاملات آتے ہیں جبکہ ایسے معاملات میں قومی مفاد کو ذاتی مفاد سے اوپر رکھنا چاہیے۔

میڈیا سے گفتگوکرتے ہوئے پنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر حمزہ شہباز نے کہا کہ آرمی چیف کی توسیع کا فیصلہ درست اور پارٹی قیادت کا تھا جبکہ پہاڑجیسےمسائل حل کرنےکیلئے شفاف الیکشن لازمی ہیں۔

اپوزیشن لیڈر پنجاب اسمبلی کا کہنا تھا کہ ہم سیاسی جدوجہد پر یقین رکھتے ہیں، پی ٹی آئی حکومت نےکرپشن کےتمام ریکارڈتوڑ دیئے، حکومت لاءاینڈ آرڈر میں بھی بری طرح ناکام ہو چکی ہے جبکہ حکومت کے پاس کوروناکےحوالےسےکوئی پالیسی نہیں ، جنوبی ایشیا میں سب سے زیادہ مہنگائی پاکستان میں ہے اور حکومت ہر محاذ پر بری طرح ناکام ہو چکی ہے، اب دوغلی پالیسی نہیں چلنے دیں گے۔

حمزہ شہباز نے کہا کہ  شہبازشریف نے اپنی حکومت میں ڈینگی کامقابلہ کیا، خطرناک مہنگائی کاسلسلہ رکتانظرنہیں آرہا، پی ٹی آئی نےجوسبزباغ دکھائےتھےوہ چکناچورہوچکے جبکہ پاکستانی قوم بہت مشکل دور سے گزر رہی ہے، سردی آئی نہیں ،گیس مہنگی ہونےکی خبریں آرہی ہیں، پی ٹی آئی کی حکومت میں لاکھوں افرادبیروزگارہوگئےہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ پشاورمیٹرومنصوبےمیں اربوں روپےکےغبن نظرآتےہیں،یہ قوم ڈینگی کوبھول چکی تھی، آج ڈینگی سے بچےبیمارہورہےہیں، مہنگائی کاطوفان تھمنےکانام نہیں لےرہا، ادویات کی قیمتوں میں 400 فیصداضافہ ہوچکا ہے ، جبکہ پی ٹی آئی نےجوخواب دکھائےتھےوہ چکناچورہو گئے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں